غیر قانونی کمرشلائزیشن اور غیر منظور شدہ ہائوسنگ سکیموں کیخلاف آپریشن تیز کردیا گیا

عوامی مسائل

فیصل آباد(حمزہ اکرم)ڈائریکٹر جنرل ایف ڈی اے رضوان نذیر کی ہدایت پر غیر قانونی کمرشلائزیشن اور غیر منظور شدہ ہائوسنگ سکیموں کیخلاف آپریشن کو مزید تیز کردیاگیا ہے اس سلسلے میں ایف ڈی اے کی انفورسمنٹ ٹیم نے مختلف علاقوں میں انسپکشن کے دوران کمر شلائزیشن اور بلڈنگ پلان کی عدم منظوری کی پاداش میں 34پلاٹس اور ایک ہائوسنگ سکیم کے دفتر کو سربمہر اور غیر قانونی تعمیراتی ڈھانچوں کو مسمار کردیا۔ تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ آفیسر امتیاز کی گورایہ کی سربراہی میں ایف ڈی اے کی انفورسمنٹ ٹیم نے ایف ڈی اے کے زیر کنٹرول رہائشی کالونیوں ، کچی آبادیوں اورکمرشل مارکیٹس میں زیر تعمیرعمارتوں کو چیک کیاتو علامہ اقبال کالونی ، مدینہ ٹائون اور مائی دی جھگی میں مختلف دکانیں بلڈنگ پلان اور کمرشلائزیشن کی منظوری کے بغیر تعمیر کی جارہی تھیں جن کوفوری طو رپر سربمہر کرکے مالکان کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ تمام تر محکمانہ اور قانونی تقاضے پورا کرنےاور مروجہ فیسوں کی ادائیگی کے بعد باقاعدہ منظوری حاصل کریں بصورت دیگر وہ تعمیراتی کام جاری نہیں رکھ سکیں گے اور انہیں بھاری جرمانوں کا سامنا کرنا پڑے گا۔ دریں اثناء ایف ڈی اے کی انفورسمنٹ ٹیم نے منظوری کے بغیر قائم کی جانیوالی شیخوپورہ روڈ پر ہائوسنگ سکیم خیابان مصطفی کو سربمہر کرکے غیرقانونی تعمیراتی ڈھانچوں کو مسمار کردیا۔ایف ڈی اے انتظامیہ کی طرف سے خبردار کیاگیاہے کہ ایف ڈی اے انتظامیہ کی طرف سے خبردار کیاگیاہے کہ ایف ڈی اے کے زیر کنٹرول رہائشی کالونیوں اور کمرشل مارکیٹس میں ہر قسم کی عمارتوں کی تعمیر سے قبل بلڈنگ پلان اور کمرشلائزیشن کی باقاعدہ منظوری حاصل کریں بصورت دیگر بلڈنگ کنٹرول کے حوالے سے قانون شکن افراد کے خلاف قانونی کارروائی کی جارہی ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے