تعلیمی اداروں میں 12 سال سے زائد عمر کے طالب علموں کو ویکسین لگانے کا آغاز

تعلیم و کھیل عوامی مسائل

فیصل آباد (حمزہ اکرم) ڈپٹی کمشنر علی شہزادنے ہدایت کی ہے کہ سرکاری ونجی تعلیمی اداروں میں 12 سال سے زائد عمر کے رہ جانے والے طالب علموں کو کورونا ویکسین لگانے کا ٹارگٹ ہر صورت مکمل کیا جائے۔انہوں نے ایک اعلی سطحی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی کی کارکردگی کا جائزہ لیا اورمہم کی سوفیصد کامیابی کے لئے سرتوڑکوششیں کرنے کی تاکید کی۔اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل قیصر عباس رند،سی ای او ایجوکیشن علی احمد سیان،اسسٹنٹ کمشنرزاوراتھارٹی کے دیگر افسران بھی موجود تھے۔ڈپٹی کمشنر نے سی ای او ایجوکیشن کو ہدایت کی کہ سرکاری ونجی سکولوں کے پرنسپلز کو پابند کیا جائے کہ بچوں کو ویکسین لگواکر رپورٹ کریں اور جن بچوں کو ریڈ ون مہم میں فرسٹ ڈوز لگ چکی انہیں ویکسین کی دوسری ڈوز لگوانے کے لئے ہیلتھ اتھارٹی سے مکمل کوارڈینیشن رکھیں۔انہوں نے کہا کہ موسم سرما کی تعطیلات سے قبل سکولوں میں سو فیصد طالب علموں کی ویکسینیشن ہونی چاہیے اس ضمن میں کوئی عذر قابل قبول نہیں۔انہوں نے اسسٹنٹ کمشنرز کو سکولوں میں بچوں کو ویکسین لگنے کی دوہری مانیٹرنگ کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے نجی سکولوں کے مالکان وپرنسپلز سے بھی روزانہ حاصل کردہ اہداف پر تفصیلی رپورٹ لینے کی تاکید کی۔انہوں نے کہا کہ ریڈ کمپین کے دوران ویکسین لگوانے کے بارے میں شہریوں کی آگاہی کے لئے تشہر کے تمام تر ذرائع بروئے کار لائے جائیں اس سلسلے میں مساجد میں اعلانات کے ساتھ ابلاغ کے تمام تر ذرائع استعمال کریں۔ڈپٹی کمشنر نے سیکرٹری آر ٹی اے سے کہا کہ مسافر بسوں میں نو ویکسینیشن نو سروس پالیسی پر عملدرآمد یقینی بنائیں اور سرکاری ونجی سٹینڈ سے کوئی بس یا ویگن سو فیصد مسافروں کو ویکسین لگنے کی تصدیق کے بغیر روانہ نہیں ہونی چاہیے جبکہ 80 فیصد گنجائش کے مطابق ہی مسافر سوار ہونے چاہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے